تازہ ترین

GB News

بچے کے ماہانہ خرچ کیلئے محسن عباس کی سابقہ اہلیہ عدالت پہنچ گئیں

Share Button

اداکار و گلوکار محسن عباس کی سابقہ اہلیہ فاطمہ سہیل نے بچے کے خرچ کے لیے عدالت سے رجوع کرلیا۔ 

سابق اینکر فاطمہ سہیل نے بچے کا خرچ لینے کی درخواست لاہور کی فیملی کورٹ میں دائر کی جس میں سابق شوہر اداکار وگلوکار محسن عباس کو فریق بنایا گیا ہے۔

درخواست میں مؤقف اپنایا گیا ہے کہ ’سابق شوہر کے تشدد سے تنگ آکر خلع لی، بچے کا ماہانہ خرچہ اکیلے برداشت نہیں کرسکتی لہٰذا عدالت سابق شوہر کو ماہانہ خرچہ ادا کرنے کا حکم دے‘۔

فیملی عدالت کی جج مائرہ حسن نے فاطمہ سہیل کے سابق شوہر محسن عباس کو 16 دسمبر کو جواب جمع کرانے کا حکم دیا ہے۔

یاد رہے کہ فاطمہ سہیل اور اداکار و گلوکارمحسن عباس حیدر کی کچھ عرصہ قبل محبت کی شادی ہوئی تھی لیکن پھر ان کے درمیان ناچاقی رہنے لگی جبکہ 20 مئی 2019 کو فاطمہ سہیل نے لاہور میں بیٹے کو جنم دیا تھا۔

20 جولائی 2019 کو فاطمہ سہیل نے سوشل میڈیا پر اپنی تصاویر شیئرکیں جن میں چہرے پر تشدد کے نشانات واضح تھے، انہوں نے الزام لگایا کہ شوہر محسن عباس انہیں اس وقت بھی تشدد کا نشانہ بناتے رہے جب وہ حاملہ تھیں۔

بعد ازاں دونوں کے درمیان معاملہ عدالت پہنچ گیا جہاں 26 ستمبر 2019 کو لاہورکی فیملی عدالت نے فاطمہ سہیل کو خلع کی ڈگری جاری کی۔

Facebook Comments
Share Button