تازہ ترین

GB News

مشرف کیس، خصوصی عدالت کے فیصلے کی وجوہات نہیں دیکھ سکتے، ہائیکورٹ

Share Button

سابق صدر پرویز مشرف کی سزا پر عملدرآمد رکوانے کے لئے لاہور ہائیکورٹ کے تین رکنی فل بنچ نے درخواستوں پر سماعت( آج)جمعہ تک ملتوی کر دی۔تفصیلات کے مطابق سابق صدر پرویز مشرف کی سزا پر عملدرآمد رکوانے کیلئے دائر درخواست پرجسٹس سید مظاہرعلی اکبرنقوی کی سربراہی میں فل بینچ نے کیس کی سماعت کی ،عدالت نے ناقص معاونت پر برہمی کا اظہار کیا۔ اظہر صدیق نے عدالت میں جواب دیا کہ آئین معطل کرنے کو آئین توڑنا نہیں کہا جاسکتا ۔ عدالت نے اپنے ریمارکس میں کہا کہ سپیشل کورٹ نے فیصلہ کن بنیادوں پر دیا ہم اسے نہیں دیکھ سکتے،ہم صرف یہ دیکھ سکتے ہیں کہ جو کارروائی شروع کی گئی وہ قانون کے مطابق تھی یا نہیں۔فل بینچ نے استفسار کیا کہ خصوصی عدالت کی تشکیل کب عمل میں لائی گئی اور پرویز مشرف کے خلاف کمپلینٹ کب درج کی گئی تھی ۔ جس پر وفاق کے وکیل نے عدالت کو بتایا کہ 18نومبر 2013کو خصوصی عدالت کی تشکیل ہو گئی تھی جبکہ 11دسمبر 2013 کو پرویز مشرف کے خلاف کمپلینٹ درج کی گئی تھی ۔لاہور ہائیکورٹ کے تین رکنی فل بنچ نے درخواستوں پر سماعت آج تک ملتوی کر دی۔

Facebook Comments
Share Button