تازہ ترین

GB News

غریب ہمارے لئے وی وی آئی پی ہیں،چیف کورٹ جسٹس ملک حق نواز

Share Button

گلگت (پ ر)چیف جسٹس گلگت بلتستان چیف کورٹ جسٹس ملک حق نواز نے کہا ہے کہ عوام کو گھر کی دہلیز پر عدل وانصاف کی فراہمی، میرٹ کی بحالی ،سفارشی کلچر کا خاتمہ، غریب کی دادرسی ہماری اولین ترجج ہے اس پر سمجھوتہ ہر گز برداشت نہیں کیا جائیگا سول کورٹ دینور گلگت کی افتتاحی تقریب سے خطاب کرتے ہوئے چیف جسٹس ملک حق نوازنے کہا کہ غریب ہمارے لئے وی وی آئی پی ہیں مقدمات کو میرٹ پربر وقت نمٹانا ہی انصاف کہلاتا ہے کسی بے گناہ کے ایک دن بھی جیل میں گزارنے کی ذمہ داری عدالت پر عائد ہوتی ہے جسٹس ملک حق نواز نے کہا کہ مجھے اس عدلیہ کا چیف جسٹس ہونے کا اعزاز حاصل ہے جسکی کارکردگی پورے پاکستان کی سطح پر بہترین اور مثالی ہے چیف کورٹ سمیت دیگر عدالتوں میں ججز کی خالی آسامیوں کو میرٹ کی بنیاد پر جلد پر کیا جائیگا تاکہ انصاف کو یقینی بنایا جاسکے انھوں نے کہا کہ چیف کورٹ سمیت ماتحت عدالتوں میں زیر سماعت مقدمات کی خود نگرانی کر رہا ہوں گلگت بلتستان چیف کورٹ میں 2018 تک کے تمام مقدمات نمٹائے جا چکے ہیں اور دیگر مقدمات کو بھی جلد نمٹایا جائیگا انھوں نے کہا کہ عدل وانصاف کی فراہمی میں دشواری یا ججز کے حوالے سے شکایت ہو تو ہمارے دروازے کھلے ہیں جائز کام ہماری ذمہ داری ہے ،مقدمات میں 14دنوں سے زائد تاریخ دینے والے ججز کے خلاف سخت کارروائی ہوگی،میرٹ کی بحالی اور قانون کی حکمرانی کو برقرار رکھنے کے لئے چیف کورٹ اور ماتحت عدالتوں کے محکمانہ قوانین میں ترمیم کر کے چیف جسٹس کے اختیارات کو محدود کر رہے، چیف کورٹ نے ایک ماہ میں 266مقدمات کو نمٹایا ہے تقریب میں جسٹس علی بیگ رجسٹرار گلگت بلتستان غلام عباس چوپا، ڈسرکٹ اینڈ سیشن جج گلگت خورشید احمد ایڈیشنل سیشن جج سہل ،سول جج اجلال حسین ، سکیرٹری قانون رحیم گل صدور و جنرل سیکرٹریز ہائی کورٹ اور ڈسٹرکٹ بار وائس چیئرمین جی بی بار کونسل سمیت وکلا اسسٹنٹ کمشنر دینور اور محکمہ تعمیرات کے افسران نے شرکت کی۔

Facebook Comments
Share Button