گندم معاملہ،پی ٹی آئی،مجلس وحدت المسلمین کا تحریک شروع کرنے کا اعلان


سکردو (محمد اسحاق جلال) تحریک انصاف اور مجلس وحدت المسلمین نے گندم کی قیمت میں ہوشربا اضافہ اور ٹارگٹڈ سبسڈی کے حکومتی فیصلے کو مسترد کرتے ہوئے جلد بڑی تحریک چلانے کا اعلان کردیا تاہم تحریک کی تاریخ کااعلان بعد میں کیا جائے گا پاکستان تحریک انصاف کا مشاورتی اجلاس سکردو کے مقامی ہوٹل میں منعقد ہوا جس کی صدارت محمد تقی اخونذادہ نے کی جس میں گندم کی قیمت میں حالیہ اضافے پر تشویش کا اظہار کیا گیا اور اس اضافے کو عوام کے اوپر ڈرون حملہ قرار دیا گیا، پی ٹی آئی کے مشاورتی اجلاس میں گندم کی قیمتوں کی اضافے اور ٹارگٹڈ سبسڈی کے خلاف جلد بڑی عوامی تحریک شروع کرنے کا بھی فیصلہ کیا گیا اور اس بابت پی ٹی آئی رہنما دیگر سیاسی مذہبی سماجی اور قوم پرست جماعتوں سے رابطے کریں گے اور تحریک کو موثر بنانے کیلئے ان سے تجاویز مانگی جائیں گی، دوسری جانب ایم ڈبلیو ایم کا ہنگامی اجلاس سید علی رضوی کی صدارت میں منعقد ہوا جس میں گندم کی قیمت میں ہوشربا اضافے اور ٹارگٹڈ سبسڈی کو ظالمانہ فیصلہ قرار دیتے ہوئے مسترد کردیا سید علی رضوی نے کہاکہ حکومت پے درپے غلط فیصلے کررہی ہے گندم کی قیمت میں ہوشربا اضافہ اور ٹارگٹڈ سبسڈی ہمارے عوام پر بہت بڑا حملہ ہے اس پر خاموش نہیں رہا جاسکتا خاموشی اختیار کی گئی تو ایک سے دو سال میں گندم کی فی بوری قیمت 12ہزار تک کردی جائے گی حکومت عوام کو چیک کررہی ہے وہ جاننا چاہ رہی ہے کہ عوام کس حدتک ردعمل دکھاتے ہیں اگر عوام نے خاموشی اختیار کی تو حکومت مزید مظالم ڈھائے گی ہم نے فیصلہ کرلیا ہے کہ عوام کے لئے کسی بھی حدتک جائیں گے۔ سید علی رضوی نے کہاکہ میں مختلف پیچیدہ بیماریوں میں مبتلا ہوں شوگر بلڈ پریشر اور دیگر پیچیدہ بیماریوں کی وجہ سے میں اکثر بہت کرب میں رہتا ہوں مگر ان بیماریوں کی پرواہ کئے بغیر عوامی مفادات کے تحفظ کیلئے سڑکوں پر بیٹھنے کیلئے تیار ہوں میرے لئے میرے علاقے کے عوام سے بڑھ کر کوئی چیز مقدم نہیں ہے خدا گواہ ہے کہ کبھی میں نے اپنی ذات کیلئے کچھ نہیں مانگا ہمیشہ عوام کے مفادات کا سوچا انسان ہونے کے ناطے غلطیاں بھی ہوتی ہیں کوتاہیاں بھی ہوتی ہیں لیکن میری کوشش یہ رہی ہے کہ میں عوام کیلئے لڑوں یہی وجہ ہے کہ مختصر وقت میں پیچیدہ بیماریوں کا شکار ہوگیا لیکن عوام کیلئے جان کی بازی لگانے سے دریغ نہیں کروں گا۔