گلگت بلتستان کیلئے ہیلی سروس کی تیاریاں، سکردو ایئرپورٹ اپ گریڈ کرنے کا منصوبہ

وزیر اعلیٰ گلگت  بلتستان خالد خورشید اور سی ای او پی آئی اے ائیر مارشل ارشد ملک کے مابین اسلام آباد میں ملاقات ہوئی۔ ملاقات میں جہاں باہمی دلچسپی کے امور پر سیر حاصل گفتگو ہوئی وہاں وزیر اعلیٰ گلگت  بلتستان خالد خورشید نے شمالی علاقہ جات کی عوام کی خواہشات اور ضروریات کی بھر پور نمائندگی کرتے ہوئے پی آئی اے کو اپنا قومی کردار ادا کرنے کی بھی استدعا کی۔ انھوں نے سی ای او پی آئی اے سے کہا کہ گلگت  بلتستان میں سیاحت کے فروغ کیلئے فضائی سروس کو زیادہ فعال کرنا وقت کی ضرورت ہے۔ گلگت  بلتستان کیلئے خصوصی پروازوں کا ترجیحی بنیادوں پر بندوبست کیا جانا چاہیے۔ جہاں پی آئی اے نے لوگوں کے پر زور اصرار پر کرایوں میں نمایاں کمی کی ہے وہاں اس بات کی بھی ضرورت ہے کرائے طویل بنیادوں پر ترجیح کے طور پر مناسب اور عوام کی استطاعت کے مطابق مقرر کئے جائیں۔ گلگت  بلتستان میں مقامی سیاحوں کے ساتھ بین الاقوامی سیاحوں کے رجحان میں اضافہ ہورہاہے جس کو مدنظر رکھتے ہوئے گلگت  بلتستان کیلئے ہیلی سروس کا آغاز کے متعلق مطالعہ کروایا جانا چاہیے۔ گلگت اور سکردو کے مابین فضائی سروس بھی دوبارہ شروع کی جائے۔ گلگت  بلتستان کیلئے فضائی سروس کو بہتر بناکر سیاحت کو بڑے پیمانے پر فروغ دیا جاسکتا ہے جس سے ملک کے زرمبادلہ میں خاطر خواہ اضافہ ہوگا۔ سی ای او پی آئی اے ارشد ملک نے یقین دلایا کہ شمالی علاقہ جات تک رسائی پی آئی اے کی بحیثیت قومی ادارہ ذمہ داری ہے جس کو وہ کئی دہائیوں سے بلا تعطل اور بغیر منافع کے فکر کے چلا رہا ہے۔ دشوار گزار ہوائی راستہ اور نا موافق موسمی حالات کے باوجود پی آئی اے کا اس آپریشن کو جاری رکھنا ایک اہم قومی فریضہ ہے۔ سی ای او پی آئی اے کا کہنا تھا کہ سکردو کیلئے پی آئی اے روزانہ ایئر بس طیارے کی سروس جاری رکھے گا جبکہ گلگت کی روزانہ کی دو پروازیں چلائی جارہی ہیں۔ موسم کی خرابی کی وجہ سے اگر فلائٹس کینسل ہوئی تو گلگت کیلئے متبادل دنوں میں اضافی پروازوں کا بندوبست کیاجائے گا۔ گلگت  بلتستان کی بلند و بالا اور حسن و جمال سے بھرپور  چوٹیوں کی سیر کیلئے ہفتے میں ایک دن ایئر سفاری شروع کرنے کا منصوبہ بھی بنا رہی ہے۔ ہیلی سروس کیلئے پرائیویٹ کمپنیز سے رابطہ کیا جارہا ہے۔ بین الاقوامی سیاحوں کے کرایوں کو کم کرکے مقامی سیاحوں کے کرایوں کے برابر کیاجائیگا۔ملاقات میں سی ای او پی آئی اے نے گلگت  بلتستان حکومت سے مضبوط رابطہ اور تعاون جاری رکھنے کی درخواست بھی کی۔ دریں اثنائوزیر اعلیٰ گلگت  بلتستان خالد خورشید نے وفاقی وزیر ہوا بازی غلام سرور خان سے ملاقات کی۔ اس موقع پر وزیر اعلیٰ گلگت  بلتستان خالد خورشید نے گفتگو کرتے ہوئے کہا کہ سکردو ایئر پورٹ کو بین الاقوامی ایئرپورٹ کا درجہ دیا جائے تاکہ گلگت  بلتستان میں سیاحت کو فروغ ملے ۔ نجی ایئرلائنز کو بھی پابند بنایاجائے کہ معاہدوں کے مطابق گلگت اور سکردو کیلئے اپنی فضائی سروس شروع کریں۔ گلگت  بلتستان میں موسم کی وجہ سے پروازیں منسوخ ہوتی ہیں جس کو مدنظر رکھتے ہوئے گلگت  بلتستان میں انسٹرومنٹل لینڈنگ فیسلٹی (آل ویدر کیلئے ضروری آلات کی تنصیب عمل میں لائی جائے) ۔ وزیر اعلیٰ گلگت  بلتستان خالد خورشید نے کہا کہ گلگت ایئر پورٹ سے ملحقہ متاثرین کو وفاقی محتسب کے فیصلے کی روشنی میں ازالے کیلئے اقدامات کئے جائیں۔ گلگت ایئرپورٹ کی توسیع کی جائے تاکہ ایئر بس سروس کو گلگت کیلئے شروع کیا جاسکے۔ وزیر اعلیٰ گلگت  بلتستان خالد خورشید نے گلگت کے مضافات میں نئے ایئرپورٹ کے قیام کیلئے بھی ضروری فزیبلٹی بھی کروانے پر بات کی۔ وزیر اعظم پاکستان عمران خان کے ویژن کے مطابق گلگت  بلتستان میں سیاحت کو فروغ دینے کیلئے فضائی سروس کو بہتر بنانا لازمی ہے۔ وزیر اعلیٰ گلگت  بلتستان خالد خورشید نے ملاقات میں گلگت  بلتستان کیلئے کرایوں میں دیگر علاقوں کی طرح کمی کرنے کیلئے بھی کہا۔ وفاقی وزیر ہوا بازی غلام سرور خان نے کہا کہ سکردو ایئر پورٹ کو اپ گریڈ کیا جائے گا اور سکردو ایئرپورٹ میں ضروری آلات کی تنصیب عمل میں لائی جائے گی۔ گلگت  بلتستان میں فضائی سروس کو بہتر بنانے کیلئے ہر ممکن اقدامات کئے جائیں گے۔ وفاقی وزیر ہوا بازی غلام سرور خان سے ملاقات میں وزیر اعلیٰ گلگت  بلتستان خالد خورشید کے ہمراہ ڈپٹی سپیکر گلگت  بلتستا ن اسمبلی نذیر احمد ایڈووکیٹ، صوبائی وزیر خزانہ جاوید علی منوا اور صوبائی وزیرسیاحت راجہ ناصر بھی موجود تھے۔ ادھر وزیر اعلیٰ گلگت  بلتستان خالد خورشید نے وفاقی وزیر انفارمیشن ٹیکنالوجی اور ٹیلی کمیونی کیشن سید امین الحق سے ملاقات کی۔ملاقات میں وزیر اعلیٰ گلگت  بلتستان خالد خورشید نے گفتگو کرتے ہوئے کہا کہ بہتر انٹرنیٹ سروس کی فراہمی گلگت  بلتستان کے نوجوانوں کا مطالبہ ہے۔ گلگت  بلتستان میں بہتر انٹرنیٹ سروس کیلئے تمام ٹیلی کام کمپنیز کو فورجی سروس شروع کرنے کیلئے کہا جائے۔ انٹرنیٹ کی بہتر سروس نہ ہونے کی وجہ سے بہت سے مسائل کا سامنا کرنا پڑ رہاہے۔ لہٰذا پی ٹی اے کو ہدایات جاری کردی جائے کہ گلگت  بلتستان میں انٹرنیٹ سروس کو بہتر بنانے کیلئے ضروری اقدامات کرے۔ گلگت  بلتستان میں یونیورسل سروس فنڈ کے دائرہ کار کو بڑھایا جائے۔ انٹرنیٹ کی سہولت فراہم کرنے والی کمپنیوں نیا ٹیل اور دیگر کمپنیوں کو بھی اپنی سروسز کو گلگت  بلتستان تک بڑھانے کیلئے احکامات دیئے جائیں۔ وفاقی وزیر انفارمیشن ٹیکنالوجی اور ٹیلی کمیونی کیشن سید امین الحق نے کہا کہ گلگت  بلتستان میں انٹرنیٹ کی بہتر سہولت کی فراہمی کیلئے نیا ٹیل سمیت تمام ٹیلی کام کمپنیوں کو فورجی سروسز کا دائرہ کار گلگت  بلتستان تک بڑھانے کیلئے راغب کیا جائے گا۔ وفاقی وزیر انفارمیشن ٹیکنالوجی اور ٹیلی کمیونی کیشن سید امین الحق نے کہا کہ جن سیاحتی مقامات میں ابھی تک انٹرنیٹ کی سہولت موجود نہیں ہے ان مقامات پر انٹرنیٹ کی سہولت فراہم کی جائے گی۔