وزیراعلیٰ کا نوٹس ،لوڈشیڈنگ کا دورانیہ کم کرنے کی ہدایت


 گلگت(پ ر)وزیر اعلیٰ گلگت بلتستان حاجی گلبر خان نے پانی میں اضافے کے باوجود گلگت شہر اور مضافات میں لوڈشیڈنگ کا نوٹس لیتے ہوئے سیکریٹری برقیات اور دیگر اعلیٰ آفیسران کو ہدایت کی ہے کہ گرمی کی شدت کی وجہ سے عوام کو مشکلات کا سامنا ہے۔ گلگت شہر اور مضافات میں بجلی کی لوڈشیڈنگ کا دورانیہ کم کرنے کےلئے ہنگامی بنیادوں پر اقدامات کئے جائیں۔ 19 جولائی تک نومل بٹوٹ 3.2میگاواٹ پاور پروجیکٹ کا کام مکمل کریں اور بجلی کو سسٹم میں شامل کریں۔ کریش پلانٹس او رکمرشل یونٹس کےلئے دن کے اوقات میں بجلی کی فراہمی نہ کی جائے۔ محرم کے ایام میں مجالس اور جلوسوں کےلئے بلاتعطل بجلی کی فراہمی کو یقینی بنایا جائے۔ ان خیالات کا اظہار وزیر اعلیٰ گلگت بلتستان حاجی گلبر خان نے محکمہ برقیات کی جانب سے گلگت شہر اور مضافات میں لوڈشیڈنگ کے حوالے سے دی جانے والی بریفنگ کے موقع پر گفتگو کرتے ہوئے کیا۔ وزیر اعلیٰ نے کہا کہ نلتر 16میگاواٹ کے کام کو اکتوبر تک مکمل کیا جائے جس کے بعد 16 میگاواٹ بجلی بھی سسٹم میں شامل ہوگی۔ محکمہ برقیات شہر میں غیر ضروری لوڈشیڈنگ کے دوران نئے کو کم سے کم رکھیں۔ اس موقع پر محکمہ برقیات کی جانب سے دیئے جانے والے بریفنگ میں کہا گیا کہ گلگت شہر میں غیر متوقع طور پر بجلی طلب بڑھ رہی ہے جس کی وجہ سے لوڈشیڈنگ کرنا پڑ رہاہے۔ وزیر اعلیٰ کے ہدایات کی روشنی میں خصوصی اقدامات کے ذریعے گلگت شہر کےلئے لوڈشیڈنگ کا دورانیہ کم کیا جائے گا اور محرم کے دوران مجالس اور جلوسوں کےلئے بھی بجلی کی بلاتعطل فراہمی یقینی بنائی جائے گی۔ادھروزیر اعلیٰ گلگت بلتستان حاجی گلبر خان نے وزیر اعلیٰ خود روزگار سکیم کے تحت اخوت فاﺅنڈیشن کے ذریعے بلاسود قرضوں کی فراہمی کے دورانئے کو مزید پانچ سال تک توسیع دی جانے کے حوالے سے منعقدہ تقریب کے موقع پرگفتگو کرتے ہوئے کہاکہ گلگت بلتستان کے یوتھ خصوصاً پسماندہ اور دور دراز علاقوں کے نوجوانوں کو روزگار کے مواقع فراہم کرنے کےلئے یہ منصوبہ شروع کیا گیا ہے، اس منصوبے میں خصوصی افراد کو بھی ترجیح دی جائے۔ وزیر اعلیٰ نے کہاکہ جن اضلاع میں ابھی تک وزیر اعلیٰ خود روزگار منصوبے کے دفاتر موجود نہیں ہیں فوری طور پر ان اضلاع میں دفاتر کا قیام عمل میں لایا جائے۔ صوبے کے دور دراز اور پسماندہ علاقوں کے نوجوانوں کو روزگار کے مواقع فراہم کرنا حکومت کی ترجیح ہے۔ اس موقع پر سیکریٹری یوتھ افیئرز اور اخوت فاﺅنڈیشن کے سی ای او کے مابین معاہدے پر دستخط کئے گئے جس کے تحت آئندہ پانچ سال تک وزیر اعلیٰ خود روزگار سکیم کے تحت نوجوانوں کو بلاسود قرضے اخوت فاﺅنڈیشن کے ذریعے دیئے جائیں گے۔