غذر،گھر گھر کرونا کی علامات، ہزاروں مریض قرنطینہ ہوگئے

غذر بھر میں کرونا بے قابو ،گاؤں گاؤں اور گھر گھر میں کرونا کی علامات کے ساتھ ہزاروں مریض قرنطینہ ہوگئے ہیں گوپس،یاسین، اشکومن اور پونیال کے اکثریتی علاقوں سے اطلاعات آرہی ہیں کہ بہت سارے افراد میں ڈائریا، تیز بخار،جسم درد، نزلہ زکام اور گلے کی خرابی کی شکایت درپیش ہیں اور یہ بیماری اب عام ہوچکی ہے مختلف گاؤں میں اموات کی شرح میں بھی پناہ اضافہ ہوچکا ہے جن کے بارے میں بتایا جارہا ہے کہ مرنے والوں میں کرونا کی علامات موجود تھیں تاہم انہوں نے اپنا چیک اپ نہیں کرایا جس باعث یہ اموات ریکارڈ پر نہیں آرہی ضلعی انتظامیہ نے ہوٹل اور باربر شاپس تو بند کردی ہیں مگر روزانہ سینکڑوں غیر مقامی افراد سیاحوں کی شکل میں بغیر کرونا ویکسینیشن سرٹیفکیٹ کے غذر میں داخل ہورہے ہیں اس وباء کو پھیلانے کی وجہ بن رہے ہیں شہریوں نے مطالبہ کیا ہے کہ جب تک غذر بھر میں تمام سیاحوں کو روک کر 14 دنوں کا مکمل لاک ڈاؤن نہیں کیا جاتا یہ وباء  اب مزید تیز ہوسکتی ہے جس کے بعد علاقے میں شدید انسانی بحران پیدا ہونے کا اندیشہ ہے۔