سینیٹ میں سیٹوں کے معاملے پر اپوزیشن کے ساتھ بیٹھیں گے، خالد خورشید

وزیر اعلیٰ گلگت بلتستان خالد خورشید نے کہا ہے کہ سینیٹ میں سیٹوں کے معاملے پر اپوزیشن کے ساتھ مل بیٹھیں گے اس کیلئے اسمبلی میں ایک قرارداد بھی آئے گی۔ فروری میں عبوری آئینی صوبے کے حوالے سے اچھی خبر ملے گی۔ گلگت میں پریس کانفرنس کرتے ہوئے انہوں نے کہا کہ عبوری صوبے کے حوالے سے کچھ غلط فہمیاں پھیلائی جا رہی ہیں، عبوری کا مطلب یہ ہے کہ کشمیر کا مسئلہ حل ہونے تک عبوری نام رہے گا باقی اختیارات دیگر صوبوں کے برابر ہی ہونگے۔ قومی اسمبلی و سینیٹ میں ہمارے ممبر کا اختیار وہی ہوگا جو دیگر صوبوں کے ممبرز کو حاصل ہوگا، ہمارا ممبر ووٹ دے سکے گا، اور وہ وفاقی وزیر بھی بن سکے گا۔ انہوں نے کہا کہ ہم اداروں کو ٹھیک کرنے کی کوشش کررہے ہیں، تاریخ میں پہلی مرتبہ تعلیم اور صحت کیلئے اتنی بڑی تعداد میں پوسٹیں منظور ہوئی اس سے پہلے ان محکموں پر توجہ نہیں دی گئی۔ ایک سوال کے جواب میں انہوں نے بتایا کہ ہم وہ نہیں جو ٹیکس لگانے کیلئے اندر دستخط کرکے باہر احتجاج کریں، ہم نے تین ماہ کیلئے  زمینوں کے خریدوفروخت پر پابندی لگائی ہے، ان تین ماہ میں لینڈ ریفارمز ایکٹ لے کر آرہے ہیں جس کے زریعے زمینوں کے حوالے سے ایشوز حل ہونگے