Image

وفاقی حکومت نے پی ایس ڈی پی سے اہم سکیمیں نکال دیں، کاظم میثم

صوبائی وزیر زراعت کاظم میثم نے کہاہے پی ایس ڈی پی میں رواں سال کیلئے بلتستان ریجن سے ایک بھی سکیم شامل نہ کرنا بلتستان کیساتھ زیادتی ہے پیجو روڈ، کواردو پل اور سکردو سیوریج کو پی ایس ڈی پی میں شامل کرانے میں اپوزیشن کردار ادا کرے کواردو پل، سیوریج سسٹم اور پیجو کو وفاقی حکومت نے پی ایس ڈی پی سے نکال دیا ہے جوکہ بہت بڑا نقصان ہے میڈیا سے بات چیت کرتے ہوئے انہوں نے کہاکہ پی ایس ڈی پی کی سابقہ سکیموں کو بھی سلوڈاون کیا جا رہا ہے گلگت بلتستان میں ترقیاتی سکیموں میں محروم علاقوں کو محروم رکھنے کی سابقہ پالیسی ختم کرکے انصاف پر مبنی ہو پچھلے سال سے اس میں بہتری آئی ہے مزید بہتر بنانے کی ضرورت ہے بجٹ میں خصوصی افراد کی بحالی کے لیے خصوصی پیکیجز رکھنا ناگزیر ہے ترقیاتی سکیموں میں ماضی میں انتہائی ظالمانہ طریقے اپنائے گئے گلگت بلتستان کا مجموعی بجٹ علاقے کی توقیر و تکریم کے مطابق نہیں، تمام جماعتیں مل کر ایسا اقدام اٹھائیں کہ ہمارا بجٹ علاقے کی تعمیر کا ضامن بنے فیڈرل گورنمنٹ نالہ لئی کی صفائی کے لیے بیس ارب خرچ کرتی ہے جبکہ جی بی کے لیے سولہ ارب کسی طور مناسب نہیں،تمام جماعتوں کو وفاق کی قصیدہ خوانی چھوڑ کر باعزت بجٹ کیلئے فیڈریشن کے سامنے ڈیمانڈ رکھنی ہوگی۔