Image

بجلی کاٹتے ہیں تو عوام بددعائیں دیتے ہیں، شہباز شریف

 وزیراعظم شہباز شریف نے کہا ہے کہ ملک میں جاری لوڈشیڈنگ پر قابو پانے کے خاطر خواہ نتائج سامنے نہیں آئے، لوڈشیڈنگ پر قابو پانا ہماری اولین ترجیح ہے،سابق حکومت نے بجلی کے پلانٹس کی مرمت کا کام نہیں کروایا،عالمی منڈیوں میں تیل اور گیس کی قیمتیں تاریخ کی بلند ترین سطح پر ہیں۔جمعہ کواسلام آباد میں لوڈشیڈنگ پر قابو پانے کے حوالے سے اجلاس سے خطاب کرتے ہوئے انہوں نے کہا کہ پاور پلانٹس کی مرمت کر کے انہیں قابل استعمال بنایا گیا ہے،خام مال کی مشینری کی امپورٹ پر پابندی عائد کی ہے،پوری دنیا میں ترقی یافتہ ممالک نے گیس خرید رکھی ہے،ہم نے مہنگی گیس خریدنے سے گریز کیا۔وزیراعظم نے کہا کہ سابق حکومت نے سستی گیس خریدنے کا موقع جان بوجھ کر گنوایا ہے،قطر کے ساتھ کئے گئے معاہدے پر سابق حکومت نے الزامات لگائے،ملک میں بجلی کاٹتے ہیں تو عوام بدعائیں دیتے ہیں اورجب گیس کاٹتے ہیں تو انڈسٹری کو دھچکا لگتا ہے،ہم عوام کو لوڈشیڈنگ سے نجات دلانے کی سرتوڑ کوششیں کررہے ہیں اس کے علاوہ قوم کی ایک ایک پائی بچانے کےلئے دن رات کام کررہے ہیں۔وزیراعظم کا مزید کہنا تھا کہ سی پیک کے تحت لگائے گئے بجلی کے پلانٹس کوئلے سے بھی بنارہے ہیں،1250میگاواٹ کا پلانٹ حویلی بہادرشاہ میں سابق حکومت کی وجہ سے بند پڑا ہے،پن بجلی کے منصوبوں میں سابق حکومت نے جان بوجھ کر تاخیر کی،ہمیں عوام کی مشکلات کا احساس ہے اور مشکل حالات میں جلد قابو پا لیں گے،ہم عوام کو ریلیف دینے کےلئے دن رات کام کررہے ہیں۔