25

امریکہ کی سعودی عرب کو تین ہزار سمارٹ بموں کی فروخت کی منظوری

امریکی وزارت خارجہ نے سعودی عرب کو 3ہزار اسمارٹ بموں کی ممکنہ فروخت کی منظوری دے دی ہے۔امریکی محکمہ دفاع کے ہیڈکوارٹر پینٹاگون کے مطابق سعودی عرب کو 3 ہزار اسمارٹ بموں کی فروخت کی مالیت 290 ملین ڈالر ہے۔بیان میں کہا گیا ہے کہ مجوزہ فروخت سے  سعودی عرب کی فضا سے زمین پر نشانہ بنانے کیلیے درکار ہتھیاروں کی ضروریات پوری ہو سکیں گی،معاہدے میں 3 ہزار اسمارٹ بم،کنٹینرز ،سپورٹ ایکیوپمنٹ اور اسپیئر اینڈ ٹیکنیکل سپورٹ شامل ہے۔پینٹاگون کا کہنا ہے کہ اسمارٹ بموں کی مجوزہ فروخت سعودی عرب کو حالیہ اور مستقبل کے خطرات سے نمٹنے کی صلاحیت بڑھائیگی۔خبر ایجنسی کے مطابق پینٹاگون ڈیفنس سیکیورٹی کو آپریشن ایجنسی نے ممکنہ فروخت سے متعلق آج کانگریس کو بھی آگاہ کردیا ہے۔خیال رہے کہ یہ ہتھیار ڈونلڈ ٹرمپ کی صدارت کے آخری ایام میں سعودی عرب کو فروخت کیے جانے کی منظوری دی گئی ہے، جب کہ نومنتخب صدر جو بائیڈن سعودی عرب کو ہتھیاروں کی فروخت روکنے کا عندیہ دے چکے ہیں۔واضح رہے کہ سعودی عرب مشرقِ وسطی میں  امریکی اسلحے کا بڑا خریدار ہے تاہم بائیڈن چاہتے ہیں کہ سعودی عرب کو ہتھیاروں کی فروخت روک کر یمن میں جنگ روکنے کے لیے  دبا بڑھایا جائے تاکہ  یمن میں جاری جنگ سے دنیا کے بدترین انسانی بحران پر قابو پایا جائے۔