47

انجمن تاجران سکردو کا شاہراہ بلتستان کے مختلف مقامات پر پشتے گرنے کی شکایات پر شدید تشویش کا اظہار


سکردو (شکور عبداللہ) انجمن تاجران سکردو نے شاہراہ بلتستان کے مختلف مقامات پر پشتے گرنے کی شکایات پر شدید تشویش کا اظہار کرتے ہوئے کہا ہے کہ سکردو روڈ پر کام غیر معیاری ہونے کے حوالے سے پہلے ہی کئی بار نشاندہی کی جاچکی تھی، لیکن کسی نے سنجیدگی کا مظاہرہ نہیں کیا، انجمن تاجران کے عہدیداران غلام حسین اطہر اور احمد چوشگری نے میڈیا سے بات چیت کرتے ہوئے کہاکہ روڈ کے پشتے گرنا کام غیر معیاری ہونے کا ثبوت ہے، ہم نے وزیراعظم، آرمی چیف کو اس حوالے سے خط بھی لکھا تھا جس کے بعد ایف ڈبلیو او حکام نے یقین دہانی کرائی تھی کہ کام معیاری ہوگا اور ٹنلز بھی بنیں گی لیکن حقیقت اس کے برعکس ہے، روڈ پر نہ معیاری کام ہو رہا ہے اور نہ ہی ٹنلز بن رہی ہیں، لینڈ سلائیڈنگ معمول بناہوا ہے، کئی جانیں ضائع ہوچکی ہیں، مسافر روڈ پر خود کو غیر محفوظ تصور کرتے ہیں، ہمیشہ خوف کے عالم میں سفر کر رہے ہوتے ہیں، انہوں نے کہاکہ روڈ کے پشتے ہی مضبوط نہیں تو روڈ پر عوام سفر کیسے کریں؟ ٹنلز کے حوالے سے بھی ابھی تک کوئی پیشرفت سامنے نہیں آئی، پشتوں کا گرنا تشویشناک بات ہے، اس حوالے سے ذمہ داروں کو فوری نوٹس لینا چاہیے اور عوام کو مطمئن کرانا چاہیے تاکہ مسافر بلا خوف سفر کر سکیں، شاہراہ کو عوام کیلئے محفوظ نہ بنایا گیا تو احتجاج کا راستہ اختیار کرنے پر مجبور ہونگے۔