اسمبلی میں اپوزیشن کا ہنگامہ، دھرنا، بجٹ کی کاپیاں پھاڑ دیں

 گلگت(خصوصی رپورٹ)بجٹ اجلاس میں ترقیاتی منصوبوں میں اپوزیشن ممبران کو نظرانداز کر نے اور ممبران کو سالانہ ترقیاتی پروگرام کی کاپی فراہم نہ کرنے پر اپوزیشن ممبران نے شدید احتجاج نعرہ بازی، بجٹ کی کاپیاں پھاڑدیں ، ایوان میں دھرنا دینے کے بعد اجلاس سے واک آﺅٹ کردیا۔ پیر کے روز بجٹ اجلاس میں جب صوبائی وزیر خزانہ انجینئر محمد اسماعیل نے بجٹ تقریر شروع کی تو اپوزیشن ممبران نے ترقیاتی فنڈز میں نظرانداز کر نے اور ممبران کو سالانہ ترقیاتی پروگرام کی کاپی فراہم نہ کرنے پر شدید احتجاج کرتے ہوئے سپیکر کے ڈائس کے سامنے پہنچے اور بجٹ کی کاپیاں پھاڑ پھاڑ کر پھینکتے رہے اور نعرے بازی بھی کرتے رہے اپوزیشن کے نواز خان ناجی وقفے وقفے سے باجہ بھی بجاتے رہے کچھ دیر بعد اپوزیشن ممبران نے وزیر خزانہ کے سامنے پہنچے اور ان کے سامنے نعرے بازی شروع کر دی اپوزیشن ممبران وزیر خزانہ کے سامنے کچھ دیر نعرے بازی کرنے کے بعد ایوان اندر دھرنا دیا، کچھ دیر ایوان میں دھرنا دینے کے بعد اپوزیشن نے اجلاس کا ہی بائیکاٹ کرکے ایوان سے چلی گئی اپوزیشن کے احتجاج اور شور شرابے کی وجہ سے گیلری میں موجود لوگوں کو وزیر خزانہ کی تقریر سننے میں مشکلات پیش آئیں