گلگت بلتستان کو سی پیک منصوبوں میں زیادہ حصہ ملنا چاہئے، خالد خورشید

وزیر اعلیٰ گلگت  بلتستان خالد خورشید سے پاکستان میں متعین چائینزسفیر نانگ رانگ نے اسلام آباد کیمپ آفس میں ملاقات کی۔ اس موقع پر وزیر اعلیٰ گلگت  بلتستان خالد خورشید نے چائینز سفیر کو گلگت  بلتستان دورے کی دعوت دی۔ وزیر اعلیٰ گلگت  بلتستان خالد خورشید نے روز کمیونی کیشن کے چند منصوبوں کے بارے میں گفتگو کرتے ہوئے کہا کہ گلگت  بلتستان کو سی پیک کے منصوبوں میں زیادہ حصہ ملنا چاہئے۔ سی پیک کا آغاز گلگت  بلتستان سے ہوتا ہے۔ انٹرنیٹ ، فورجی کے دائرہ کار کو پورے گلگت  بلتستان میں وسعت دی جارہی ہے جس سے کمیونی کیشن میں بہتری آئے گی۔ وزیر اعلیٰ گلگت  بلتستان خالد خورشید نے کہا کہ آئندہ ایک مہینے میں گلگت  بلتستان کے حوالے سے پاور پالیسی کی منظوری دی جائے گی جس کے بعد گلگت  بلتستان میں سرمایہ کاری کے مزید مواقع میسر آئیں گے۔ وزیر اعلیٰ گلگت  بلتستان خالد خورشید نے چائینز سفیر سے ملاقات میں گلگت  بلتستان میں سپیشل اکنامک زون کے قیام کے حوالے سے گفتگو کرتے ہوئے کہا کہ چائینز ماہرین اور کمپنیوں کی خصوصی خدمات گلگت  بلتستان میں سپیشل اکنامک زون کے قیام کے حوالے سے درکار ہیں۔ وزیر اعلیٰ گلگت  بلتستان خالد خورشید نے کہا کہ چائینز تعمیراتی کمپنیاں  این ایچ اے کے تعاون سے شاہراہ قراقرم کی ری الائمنٹ میں تعاون کریں۔وزیر اعلیٰ گلگت  بلتستان خالد خورشید نے کہا کہ گلگت  بلتستان میں سرمایہ کاری کیلئے چائینز کمپنیوں کو بہتر سہولیات اور تعاون فراہم کیا جائے گا۔ملاقات میں وزیر اعلیٰ گلگت  بلتستان نے کرونا وائرس کی وجہ سے پیدا صورتحال کے پیش نظر گلگت  بلتستان کو ویکسین اور آکسیجن کی فراہمی کی بھی درخواست کی۔چائینز سفیر نانگ رانگ نے وزیر اعلیٰ گلگت  بلتستان خالد خورشید کے ویژن کو سراہتے ہوئے کہا کہ باہمی تعاون کو مزید فروغ دینے اور مسائل کو ترجیحی بنیادوں پر حل کرنے کیلئے حکومت گلگت  بلتستان کی جانب سے فوکل پرسن کا تعین کیا جائے گا تاکہ مثبت تجاویز کا تبادلہ کرنے میں معاون ثابت ہوسکے۔ چائینز سفیر نے کہا کہ CRBCچائینز کی سپیشل کمپنی ہے۔ CRBCشاہراہ قراقرم کی ری الائمنٹ کیلئے این ایچ اے کے تعاون سے اپنا کردار ادا کر ے گی۔ سپیشل اکنامک زون کا قیام سی پیک کے حوالے سے اہمیت کا حامل ہے جس کیلئے ہر ممکن تعاون فراہم کریں گے۔چینی سفیر نے گفتگو کرتے ہوئے کہا کہ چائینز میڈیا میں وزیر اعلیٰ گلگت  بلتستان کا خصوصی انٹرویو کیلئے اقدامات کئے جائیں گے جس سے گلگت  بلتستان میں موجود سرمایہ کاری کے حوالے سے چائینز سرمایہ کاروں کو آگاہی ہوگی۔ شاہراہ قراقرم دونوں ممالک کے مابین رابطے کا انتہائی اہم منصوبہ ہے۔ انہوں نے کہاکہ شاہراہ قراقرم کی تعمیر کے دوران قیمتی جانوں کا نذرانہ دینے والے چائینز مزدوروں کی یاد میں میوزیم بنایا جائے گا۔